string(22) "Home" بین الاقوامی تحفظ اور اسپین میں پناہ کی درخواست

بین الاقوامی تحفظ اور اسپین میں پناہ کی درخواست

اسپین میں بین الاقوامی تحفظ کی درخواست کون دے سکتا ہے؟ Click to unfold the content

قانون 12/2009 جو اسپین میں پناہ اور جزوی تحفظ کے حق کو باقاعدہ کرتا ہے ہر اس شخص کیلئے پناہ گزین کے درجہ کو تسلیم کرتا ہے جسے اس بات کا خوف ہو کہ اسے اس کے ملک میں نسل، مذہب، قومیت، سیاسی رائے دہی، کسی معین سماجی، جنسی یا جنسی رجحان کے گروہ سے تعلق کی وجہ سے جان و مال کا خطرہ ہو۔

اس کے علاوہ، بے وطن شخص کو بھی تسلیم کرتا ہے جس کی قومیت نہ ہو اور وہ اپنے معمول کے رہائشی ملک سے باہر ہو، مندرجہ بالا وجوہات کی وجہ سے واپس نہ جانا چاہتا ہو یا جا نہ سکتا ہو۔

پناہ کے لیے درخواست کہاں دی جا سکتی ہے؟ Click to unfold the content

اسپین کی سرزمین پر داخل ہوتے وقت موجود سرحدی چوکیوں، بندرگاہوں پر اور ہوائی اڈوںپر؛ پناہ اور دارالامان کے دفاتر (OAR) میں؛ اور غیر ملکیوں کی نظر بندی مراکز (CIE) میں۔

بارسلونا میں پناہ اور دارالامان کا دفتر (OAR) paseo de Sant Joan, 189 پر واقع ہے۔ میٹرو L4 Joanic (پیلی لائن)۔

کیا بیرون ملک سے پناہ کی درخواست دے سکتے ہیں؟ Click to unfold the content

پناہ کے حوالے سے اسپین کا قانون یہ ممکن بناتا ہے کہ دیگر ممالک میں موجود اسپین کے سفارت کار فروغ دیں کہ بین الاقوامی تحفظ کے کسی درخواست دہندہ کو منتقل کیا جا سکے جس نے سفارت خانے سے یہ دعویٰ کرتے ہوئے رجوع کیا ہو کہ اس کی جسمانی سالمیت کو خطرہ لاحق ہے، ہمیشہ کہ وہ اس ملک کا شہری نہ ہو جہاں موجود ہے۔

پناہ کے حصول کے لیے مرحلہ وار طریق کار کیا ہے؟ Click to unfold the content

پہلا مرحلہ بارسلونا میں پناہ اور دارالامان کے دفتر (OAR) میں ذاتی انٹرویو دینے کے لیے ملاقات کے لیے وقت حاصل کرنا ہے۔ انٹرویو میں بنیادی طور پر آپ کی شناخت، اسپین تک پہنچنے کے لیے اختیار کیے گئے سفر اور راستے اور آپ کی تکلید دہی کے بارے میں پوچھا جائے گا۔ آپ کی مدد کرنے کے لیے، یہ جاننا ضروری ہے کہ کیا ہوا ہے۔ انٹرویو کے دوران یا کاروائی کے تمام تر عمل میں آپ دستاویزی شواہد پیش کر سکتے ہیں۔

اگر درخواست کو کاروائی کے لیے داخل کیا جاتا ہے تو OAR ایک ماہ کے عرصہ میں فیصلہ کرے گا۔ اس صورت میں کہ آپ نے درخواست ایک سرحدی چوکی پر دی ہو تو مجاز اداروں کے پاس فیصلہ کرنے کیلئے چار دن ہوں گے۔

یاد رکھیں کہ ڈبلن کنوینشن قائم کرتا ہے کہ یورپی یونین کی ارکان ریاستیں جہاں کوئی شخص پہلی بار پہنچے وہ پناہ کی کاروائی کرنے کی ذمہ دار ہے۔ لہٰذا، اگر آپ اسپین میں اندراج کرواتے ہیں تو کسی دوسرے ملک میں نہیں کروا سکتے۔

کیا کاروائی رازدارانہ ہے؟ Click to unfold the content

تمام کاروائی کی نوعیت رازدارانہ ہے اور وہ لوگ جو آپ سے گفتگو کریں (اہلکار، پولیس، مترجمین، وکیل) ان پر لازمی ہے کہ وہ آپ کی جانب سے بتائی گئی ہر بات کو بصیغۂ راز رکھیں۔

صرف اقوام متحدہ کے اعلیٰ کمشنر برائے مہاجرین (ACNUR) کو مطلع کیا جاتا ہے۔ کبھی بھی آپ کے ابتدائی ملک یا جہاں سے آپ آئے ہیں کی حکومت کو اس بارے میں مطلع نہیں کیا جائے گا کہ آپ نے پناہ کا مطالبہ کیا ہے۔ اور نہ ہی آپ کو اپنے ابتدائی ملک یاجہاں سے آپ آئے ہیں وہاں واپس بھیجا جا سکتا ہے جب تک کہ آپ کے معاملے پر فیصلہ نہ کیا جائے۔

کیا کسی وکیل اور مترجم کی مدد حاصل کر سکتے ہیں؟ Click to unfold the content

جی ہاں۔ پناہ کیلئے درخواست کرنے والوں کو مفت قانونی معاونت اور مترجم کی خدمت کا حق حاصل ہے۔

 مہاجرین، تارکین وطن اور پناہ گزین کے لیے خدمت (SAIER)، جو بارسلونا کی آیونتامینتو کے تحت ہے، میں انٹرویو اور دستاویزی شواہد کی تیاری کے معاملہ میں آپ کی رہنمائی کی جائے گی۔

SAIER اور اسی طرح مفت عدالتی کاروائی (SERTRA)، بارسیونا کے وکلاء بار کی خدمت آپ کو پناہ اور دارالامان کے دفتر (OAR) میں دوران انٹرویو معاونت فراہم کر سکتی ہیں۔ اس کے علاوہ دیگر ادارے، جیسا کہ ACCEM اسپینش کمیشن برائے پناہ گزین کی مدد (CEAR

پناہ کی درخواست مجھے کس چیز کا حق دیتی ہے؟ Click to unfold the content

پناہ کی درخواست کا حق آپ کو اسپین میں رہنے کا حق دیتی ہے اور کسی بھی قسم کی واپسی کے عمل اور اخراج جو کیا جا سکتا ہو ، کو معطل کرتی ہے جب تک آپ کی درخواست پر فیصلہ نہیں ہوتا، قانونی اور صحت کی خدمات کا حصول، مخصوص سماجی سہولیات حاصل کرنا اور بین الاقوامی تحفظ کے درخواست دہندہ کے طور پر قابل شناخت ہونا۔

کون سی دستاویزات ملیں گی ؟ Click to unfold the content

پہلی دستاویز جو حاصل ہو گی اس کا نام ہے دیلیخینسیا دے اینترےویستا (انٹرویو کیلئے دستاویز)، اس بارے میں کہ آپ کا OAR کے ساتھ انٹرویو کے لیے وقت مقرر ہو گیا ہے تاکہ پناہ کی درخواست کے عمل کو شروع کیا جا سکے۔

ایک بار جب OAR میں انٹرویو دے چکیں، آپ کے پاس ایک سفید دستاویز ہو گی جس میں آپ کے ذاتی کوائف درج ہوں گے اور آپ کی تصویر ہو گی جو تصدیق کرے گی کہ آپ کو اسپین میں رہنے کا حق حاصل ہے جب تک کہ آپ کی پناہ کی درخواست یہاں زیر غور ہے۔ ایک بار جب درخواست کاروائی کے عمل کے لیے داخل کر لی جائے تو آپ کے پاس 3 تا 6 ماہ قابل توسیع، ایک سرخ رنگ کی دستاویز ہو گی۔ اس 6 ماہ کے عرصہ کے گزرنے کے بعد، آپ کو اسپین میں کام کرنے کی اجازت ہو گی۔

ایسے افراد جو بے وطن کی حیثیت سے درخواست کرتے ہیں ان کے پاس تصویر لگی ایک سبز رنگ کی دستاویز ہو گی اور ایک غیر ملکی شناختی نمبر (NIE) بھی ہو گا، لیکن انہیں کام کرنے کی اجازت نہ ہو گی۔

کون سے سماجی فائدے حاصل ہوں گے؟ Click to unfold the content

اسپینش حکومت کے پاس پناہ کے درخواست دہندگان کے لیے مالی اعانت کے بغیر سماجی معاونت کا پروگرام ہے جو ان کی بنیادی ضروریات کو پورا کرتا ہے—رہائش، غذائی ضروریات اور نفسیاتی سماجی معاونت— پناہ کی درخواست دینے پر ابتدائی چھ ماہ کے دوران۔

بارسلونا میں پناہ گزین کے لیے سماجی معاونت کا پروگرام تین سماجی ادارے چلاتے ہیں: ACCEM، CEAR اور Cruz Roja۔

تاہم، مدنظر رکھنا چاہئیے کہ آپ اپنی رہائش کے مقام کا انتخاب نہیں کر سکتے؛ یہ ایک ایسا فیصلہ ہے جو اسپینش حکومت اپنے نیٹ ورک میں موجود پناہ کے مراکز میں دستیاب جگہوں کی بنیاد پر کرے گی۔

میرے معاملے پر کب اور کون فیصلہ کرے گا؟ Click to unfold the content

اسپینش حکومت پناہ اور تحفظ دینے کی واحد مجاز ہے۔ پناہ اور تحفظ کے وزارتی کمیشن کی تجویز پر اسپینش وزارت داخلہ اس کا فیصلہ کرے گی۔

درخواست کو کاروائی کے لیے داخل کرنے پر، زیادہ سے زیادہ چھ ماہ میں فیصلہ ہونا چاہیے۔ تاہم، کاروائی میں زیادہ دیر لگتی ہے۔ اگر تاخیر ہو جائے تو آپ کو تاخیر کی وجہ سے آگاہ کرنا چاہیے۔ یاد رکھیں کہ آپ کو اپنی فائل کو دیکھنے کا حق حاصل ہے۔

ذیلی تحفظ کیا ہے؟ Click to unfold the content

ذیلی تحفظ ان لوگوں کو دیا جاتا ہے جو اپنے ابتدائی وطن واپس نہیں جا سکتے کیونکہ انہیں نقصان پہنچنے کا حقیقی خطرہ ہے، جیسا کہ سزائے موت یا قتل، تشدد یا غیر انسانی اور ذلت آمیز رویہ یا امتیازی تشدد کی صورتحال کی وجہ سے ان کی زندگیوں یا سالمیت کو شدید دھمکیاں بوجہ اندرونی یا بین الاقوامی صورتحال۔

کیا خاندان کو بڑھانے کا حق حاصل ہے؟ Click to unfold the content

اسپینش قانون بین الاقوامی تحفظ سے مستفید ہونے والے افراد کی بیو ی/شوہر یا ساتھی، بالغ عمر سے کم بچوں اور اول درجہ میں اجدا کو ذیلی تحفظ کا حق دیتا ہے ہمیشہ کہ ان کے منحصر ہونے کی تصدیق کی جائے اور ان کی قومیت مختلف نہ ہو۔ اس کے علاوہ دیگر رشتہ داروں کو بھی دیا جا سکتا ہے اگر یہ تصدیق کی جائے کہ وہ ابتدائی ملک میں بھی ساتھ رہتے اور انحصار کرتے تھے۔

اگر بین الاقوامی تحفظ حاصل کروں، کیا مجھے قومیت بھی حاصل ہو گی؟ Click to unfold the content

نہیں، اگر پناہ گزین کی حیثیت حاصل ہوتی ہے تو رسائی کا عرصہ کم ہو جاتا ہے اور پانچ سال کے بعد درخواست دے سکتے ہیں۔

اسپین میں کتنے لوگوں نے پناہ کی درخواست دی ہے؟ Click to unfold the content

سال 2015 کے پہلے نو ماہ کے دوران اسپین میں بین الاقوامی تحفط کی 10,000 سے زائد درخواستیں موصول ہوئیں۔ 2014 کے دوران، 5,952 درخواستوں پر عمل ہوا، جو کہ مجموعی طور پر یورپی یونین کے 28 ممالک کا 0.9 فیصد ہے۔

کتنے لوگوں کو تحفظ دیا گیا ہے؟ Click to unfold the content

ACNUR کے سال 2014 کے کوائف کے تحت اسپین میں 5,798 پناہ گزین افراد ہیں اور 7,535 پناہ کے درخواست دہندگان ہیں۔ اُس سال، وزارت داخلہ نے 1,585 افراد کو تحفظ دیا اور 2,070 کو رد کیا گیا۔ 43.3 فیصد فیصلہ جات کامیاب ہوئے اور 56.7 فیصد ناکام ہوئے۔

اگر مجھے پناہ دینے سے انکار کیا جائے تو کیا ہو گا؟ Click to unfold the content

اس صورت میں آپ کو اسپین چھوڑنا ہو گا، ماسوائے اس کے کہ آپ کے پاس کسی قسم کی رہائش کی اجازت ہو۔ اس کے علاوہ آپ اپنی پناہ کی درخواست کے مسترد ہونے کے خلاف کسی عدالت میں اپیل دائر کر سکتے ہیں۔